Breaking News
Home / خبریں / پاک انڈیا / پاکستان کے پانیوں پر قبضہ انڈیا کو بہت مہنگا پڑے گا۔ . تحریک آزادی جموں کشمیر کسان کشمیر کارواں
پاکستان کے پانیوں پر قبضہ انڈیا کو بہت مہنگا پڑے گا۔ . تحریک آزادی جموں کشمیر کسان کشمیر کارواں

پاکستان کے پانیوں پر قبضہ انڈیا کو بہت مہنگا پڑے گا۔ . تحریک آزادی جموں کشمیر کسان کشمیر کارواں

لاہور( PakMediaUpdates.com  )
مذہبی وسیاسی قائدین اور کسان تنظیموں کے رہنماﺅں نے تحریک آزادی جموں کشمیر کے کسان کشمیر کارواں سے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ مودی سرکار یادرکھے! پاکستان کے پانیوں پر قبضہ انڈیا کو بہت مہنگا پڑے گا۔ آج ہزاروں کسان سڑکوں پر ہیں‘ہم راوی ، چناب اور جہلم میں دوبارہ روانی لائیں گے۔کشمیر ڈیموں سمیت پاکستان کا حصہ بنے گا۔ کسی کو آنے والی نسلوں کا پانی بیچنے کا اختیار نہیں۔پانامہ والے راوی، چناب اور جہلم کے پانیوں کا بھی قوم کو حساب دیں۔ حافظ محمد سعید کی نظربندی ختم نہ کی گئی تو کروڑوںپاکستانی سڑکوں پر نکلیں گے۔ گستاخ بلاگرز رہا اور بیرونی دباﺅ پر محب وطن لیڈروں کو قید کیا جارہا ہے۔ حافظ محمد سعید و دیگر رہنماﺅں کو فی الفور رہا کیا جائے۔نظربندیاں اور گرفتاریاں ہمارے راستے میں رکاوٹ نہیں بن سکتیں۔ حافظ محمد سعید کو گرفتار کر کے حکمران کشمیربھارت کی جھولی میں ڈالنا چاہتی ہیں۔ ٹریک ٹو ڈپلومیسی کے ذریعہ کشمیریوں کی مرضی کے برعکس مسلط کردہ کوئی حل قبول نہیں کریں گے۔ سال 2017ءکو کشمیر کے نام کرتے ہوئے شروع کی گئی ملک گیر جدوجہد بھرپور انداز میں جاری رکھیں گے۔لاہور کی طرح دیگر شہروں میں بھی بڑے کسان کارواں ہوں گے۔ان خیالات کا اظہار دفاع پاکستان کونسل اور جماعةالدعوة کے مرکزی رہنماپروفیسر حافظ عبدالرحمن مکی، لیاقت بلوچ، شیخ رشید احمد ، محمد علی درانی،محمد ایوب میو، حافظ عبدالغفارروپڑی، مولانا امیر حمزہ، قاری یعقوب شیخ،محمد خاں لغاری،حافظ طلحہ سعید،اشفاق احمد ورک، شیخ نعیم بادشاہ، ابوالہاشم ربانی،حافظ خالد ولید، ڈاکٹر سجاد حیدر، سید حسن باری، ملک شوکت علی اعوان، علی عمران شاہین، مولانا ادریس فاروقی، حافظ عثمان شفیق، حافظ مسعود الرحمن جانباز، علی ظفر، عبداللہ عبدالرحمن ودیگر نے ہزاروں کسانوں کے مال روڈ پہنچنے پر کارواں کے شرکاءسے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ لاہور اور اس کے گردونواح سے ٹریکٹروں، ٹرالیوں اور موٹر سائیکلوں پر بیٹھ کر آنے والے ہزاروں کسان مال روڈ پہنچے توزبردست جذباتی ماحول دیکھنے میں آیا۔اس دوران سفید پگڑیاں پہنے کسانوں کی طرف سے انڈیا کیخلاف شدید نعرے بازی کی گئی۔ دفاع پاکستان کونسل اور جماعةالدعوة کے مرکزی رہنما حافظ عبدالرحمن مکی نے کہاکہ حکمران انڈیا سے دوستی اور پسندیدہ ملک قرار دینے کی روش چھوڑیں۔ راوی گندا نالہ بن چکا ہے۔ حکومت ان پانیوں پر انڈیا کے قبضہ کا حساب دے۔ سرتاج عزیز کہتے ہیں کہ حافظ محمد سعید کی گرفتاری نیشنل ایکشن پلان کا حصہ ہے ۔ حکومتی عہدیداران کوایسی باتیں کرتے ہوئے شرم آنی چاہیے۔حافظ محمد سعید ایک کسان کے بیٹے ہیں۔ پانی کے مسئلہ پر خاموش نہیں رہیں گے۔ مودی پاکستان کا پانی بند کرنے کی دھمکیاں دیتا ہے اور حکمران سوئے پڑے ہیں۔ کسان متحد ہیں۔ جلد ان شاءاللہ دریاﺅں کی طغیانی واپس آئے گی۔ کشمیرآزاد ہو گا اور پانیوں کا قبضہ واپس لیں گے۔ یہ کسانوںاور اس قوم کا ایکشن ہوگا۔ انہوںنے کہاکہ حکومتی رویہ باعث شرم ہے۔ جو شخص پاکستان کے دفاع، استحکام اور پانیوں کی بحالی کیلئے قوم کو متحد کر رہا ہے اور پورے ملک میں تحریک لیکر کھڑا ہے تم اس کیخلاف میڈیا ٹرائیل کر رہے ہو۔عبدالرحمن مکی نے کہاکہ ہم مسلم حکمرانوں کیخلاف بددعائیں کرنے اور سیاسی مخاصمت رکھنے والے لوگ نہیں ہیں تاہم ملکی سلامتی و استحکام کے مسئلہ پر خاموش نہیں رہیں گے۔ جو کوئی پاکستانی دریاﺅں اور کشمیر کے ساتھ بدنیتی رکھتا ہے اللہ تعالیٰ اس کے ساتھ نمٹے گا۔حکمران اللہ کی پکڑ سے ڈریں۔ وہ سمجھتے ہیں کہ نظربندیوں سے یہ گھر بیٹھ جائیں گے‘ ایسا نہیں ہوگا۔ اللہ تعالیٰ اس جماعت کو اور زیادہ عزت دے گا۔ کوئی قوم اپنا پانی نہیں بیچتی۔ کسی کوآنے والی نسلوں کا پانی بیچنے کا اختیار نہیں ہے۔ ہم راوی ، چناب اور جہلم میں دوبارہ روانی لائیں گے۔ اس موقع پر ہزاروں کسانوں نے دونوں ہاتھ اٹھا کر بھارتی قبضہ سے اپنے دریاﺅں پر قبضہ چھڑانے کا عہد کیا۔انہوںنے کہاکہ اب فیصلوں کا وقت ہے۔ دھمکیوں سے متاثر نہیں ہوں گے۔ سال 2017ءکو کشمیر کے نام کرتے ہوئے شروع کی گئی جدوجہد بھرپور انداز میں جاری رکھیں گے۔ عبدالرحمن مکی نے کہاکہ آج ہزاروں کسان بھارت کو پیغام دیتے ہیں کہ پاکستان کے پانیوں پر قبضہ انڈیا کو مہنگا پڑے گا۔کلمہ طیبہ کے نام پر قائم اس ملک کے قیام کیلئے لاکھوں کسانوںنے اپنی زمینوں کو قربان کر دیا۔ کہا جاتا ہے کہ بھارتی سیاست میں کسانوں کا دخل ہے۔ہم کہتے ہیں کہ سیاستدانوںکو پتہ ہونا چاہیے بھارتی کسان کا سیاست میں دخل ہے تو پاکستان کے کسان کا شہادت میں دخل ہے۔پانامہ والوں کو کسانوں کے غضب سے ڈرنا چاہیے۔ آج کسان اسلئے سڑکوں پر ہیں کہ جس پاکستان کیلئے انہوں نے قربانی دی آج اس کا راوی، ستلج، چناب اور سندھ سوکھے پڑے ہیں۔ انڈیا نے ڈیم بنا کر پانیوں پر قبضہ کر لیا ہے۔جماعت اسلامی کے مرکزی سیکرٹری جنرل لیاقت بلوچ نے کہا کہ حافظ محمد سعید کی گرفتار ی پوری کشمیری قوم کیلئے صدمہ کا باعث ہے۔ کسان کشمیر کارواں کا انعقاد کر کے پوری قوم کے جذبات کی ترجمانی کی گئی۔اسلامی تہذیب،عقیدہ ختم نبوت ﷺ پر ہرزہ سرائی کرنے والے بلاگرز کو رہا کر دیا گیا اور حافظ محمد سعید نظربند ہیں۔حکمرانوںنے نائن الیون کے بعد امریکہ کی چاپلوسی کی انتہا کر دی لیکن اب امریکہ بھارت کی سرپرستی کر رہا ہے۔حافظ محمد سعید کی گرفتاری سے کشمیریوں کی پیٹھ میں چھرا گھوپنا گیا ہے۔ہم پوچھنا چاہتے ہیں کہ ان کا جرم کیا ہے،دنیا کی کسی عدالت میں ابھی تک حافظ محمد سعید کا کوئی جرم ثابت نہیں ہو سکا،یہ کاروائی صرف اس لئے ہے کہ کشمیریوں کے حق میں اٹھنے والی آواز کو دبا دیا جائے۔انہوں نے کہا کہ کشمیر کی آزادی کی آواز اور بھارت سازشوں کو ناکام بنانا حافظ محمد سعید کا جرم ہے۔تو اس جرم کا اعتراف ہم سب کرتے ہیں۔ہم چاہتے ہیں کہ پاکستان میں اللہ کا دین غالب ہو،کشمیر آزاد ہو اور کشمیریوں کو مستقبل کے فیصلے کا حق ملنا چاہئے۔عوامی مسلم لیگ کے سربراہ شیخ رشید احمد نے کہا کہ وزیر اعظم نواز شریف بتائیں چار فروری کو حافظ محمد سعید کو نظربند کر کے کشمیریوں کو کیا پیغام دیا گیا؟۔بھارت میں منصوبہ بندی کے تحت مودی کوکامیاب کروایا گیا۔بھارت سے ڈونلڈ ٹرمپ کا گٹھ جوڑ بھی پلاننگ کا حصہ ہے۔جس دن تمام اسلامی قوتیں ایک ہو جائیں گی اس دن کشمیر کی آزادی کی منزل قریب ہو گی۔ جماعة الدعوة نے جو قربانیاں کشمیر میں دیں وہ کسی نے نہیں دیں ،چین حافظ محمد سعیداور مولانا مسعود اظہر کے حق میں بولتا ہے باقی کسی اسلامی ملک نے آواز نہیں اٹھائی۔انہوں نے کہا کہ جماعة الدعوة کھل کر کہے کہ ہم سیاسی پارٹی بنا رہے ہیں۔کسان اس ملک کی اکانومی ہیں۔دینی قوتیں اور کسان اکٹھے ہو جائیں ۔دنیا میں کوئی ملک ایسا نہیںجو کسان کا دفاع نہ کرتا ہو سوائے پاکستان کے، بھارت سے ہلدی مرچ منگوا کر کسانوں کا استحصال کیا جار ہا ہے۔انہوںنے کہاکہ پاکستان کے لئے2017اہم ملک ہے۔تمام مکاتب فکر اکٹھے ہو جائیں۔سابق وفاقی وزیر اورمسلم لیگ فنکشنل کے جنرل سیکرٹری محمد علی درانی نے کہا کہ حافظ محمد سعید کی گرفتاری میں چین کا کوئی عمل دخل نہیں۔ اس حوالہ سے سازش کے تحت جھوٹا پروپیگنڈا کیا گیا۔ جماعةالدعوة جیسی تنظیمیں تو سی پیک اور پاکستان کی سب سے بڑی محافظ ہیں۔سی پیک کی تکمیل کے لئے کشمیر کی آزادی ضروری ہے۔حافظ محمد سعید کو گرفتار کر کے مودی کو خوش کیا گیا ہے۔حکومت انہیں فی الفور رہاکرے۔حکمرانوں کو لندن فلیٹس کے لئے کنفرمیشن چاہئے اور حافظ سعید کی نظربندی کے لئے صر ف ان کا حکم نامہ کافی ہے‘ یہ طریقہ درست نہیں ہے۔ حافظ محمد سعید کو رہا نہ کیا گیا تو پاکستان بھر سے ہزاروں نہیں بلکہ لاکھوں لوگ از خود گرفتاریاں پیش کریںگے ۔پاکستان کا بچہ بچہ حافظ محمد سعید کے ساتھ ہے اور پانی،کشمیر کی اہمیت کو جانتا ہے۔انہوںنے کہاکہ حافظ محمد سعید کی گرفتاری سے تحریک آزادی کشمیر کو نقصان پہنچا اور مودی خوش ہوا ہے۔حکومت یاد رکھے !تحریک آزادی میں قربانیاں پیش کرنے والوں کوجو کوئی نقصان پہنچانے کی کوشش کرے گا وہ خودنقصان اٹھا ئے گا۔ پاکستان متحدہ کسان محاذ کے چیئرمین محمد ایوب میو نے کہاکہ پاکستان بھر کے کسان آج متحد اور حافظ محمد سعید کے قافلے میں شامل ہیں۔انڈیا نے سندھ طاس معاہد توڑا تو ہم اسے توڑ ڈالیں گے۔ پاکستان کے کسان ہر قربانی دینے کیلئے تیار ہیں۔ اس ملک کو بنجر نہیں ہونے دیں گے۔جماعت اہلحدیث کے امیر حافظ عبدالغفار روپڑی نے کہا کہ کسان پگڑی پہن کر میدان میں نکل آئے ہیں ۔کشمیر پاکستان کی شہ رگ ہے اسے دشمن سے چھڑائیں گے،حافظ محمد سعید نے مودی کو للکار اتھا کہ ہم اپنا حق لیں گے۔تحریک حرمت رسول ﷺ کے کنوینر مولانا امیر حمزہ نے کہاکہ مودی نے کہا تھا کہ پاکستا ن کو تنہا کر دیں گے لیکن آج پاکستان میں 35ملک بحری مشقوں میں مصروف ہیں اور انڈیا خود اکیلا ہو چکا ہے۔ہم پاک بحریہ کو سلام پیش کرتے ہیں۔ حافظ محمد سعید کونظربند کر کے انڈیا کو خوش کیا گیا۔پاکستانی قوم جماعة الدعوة کے ساتھ کھڑی ہے۔پاک چین دوستی مزید مضبوط ہو گی۔ کشمیر دریاﺅں کا مرکز ہے وہاں پاکستانی پرچم لہرائے گا۔ نظریہ پاکستان رابطہ کونسل کے چیئرمین قاری یعقوب شیخ نے کہاکہ حافظ محمد سعید کو گرفتار کر کے حکومت کشمیرکو بھارت کی جھولی میں ڈالنا چاہتی ہے لیکن پاکستانی قوم ایسا نہیں ہو نے دے گی۔پاکستان کا بچہ بچہ حافظ محمد سعید کا کردار ادا کرے گا۔جمعیت علماءپاکستان کے رہنمامحمد خان لغاری نے کہا کہ مسئلہ کشمیر پرحکومتیں مصلحت کا شکار ہیں۔ کشمیر کی آوازبلند کرنے پر حافظ محمد سعید کو پابند سلاسل کیا گیااگر بھارت پابندی لگاتا تو بات سمجھ میں آتی تھی۔پاکستانی حکمرانوں نے کشمیر کا نعرہ صرف اقتدار کے لئے لگا یا اور ہمیشہ کشمیر کاز سے غداری کی۔ہم حافظ محمد سعید کے ساتھ اور مودی کے یاروں کے خلاف ہیں۔جماعة الدعوة شعبہ کسان کے چیئرمین اشفاق احمد ورک نے کہا کہ جس وقت مودی نے کہا پاکستان کا پانی بند کر دوں گا تو حافظ محمد سعید نے جواب دیا تھا کہ مودی پانی بند کرے گا تو پھر دریاﺅں میں خون بہے گا۔ نریندرمودی صوبوں کو آپس میں لڑانا چاہتا ہے۔حافظ محمد سعید کو اس جرم میںنظربند کیا گیا ہم کسان اعلان کرتے ہیں کہ پاکستان کے سب زمیندار سڑکوں پر ہوں گے۔اساتذہ جماعة الدعوة کے مسﺅل حافظ طلحہ سعید نے کہاکہ کشمیر پاکستان کی شہ رگ ہے۔ اگر شہ رگ قبضہ میں ہو تو سانس لینا بھی مشکل ہوتا ہے۔ پاکستان کی سالمیت میں جماعةالدعوة بہت بڑا کردار ادا کر رہی ہے۔ نظربندیوں اور پابندیوں کی کوئی حیثیت نہیں۔ اس سے تحریکیں مزید پروان چڑھتی ہیں۔مذہبی، سیاسی و کسان رہنماﺅں شیخ نعیم بادشاہ، ابوالہاشم ربانی، ڈاکٹر سجاد حیدر، سید حسن باری،حافظ خالد ولید، ملک شوکت علی اعوان، علی عمران شاہین، مولانا ادریس فاروقی، حافظ عثمان شفیق، حافظ مسعود الرحمن جانباز، علی ظفر، عبداللہ عبدالرحمن ودیگر نے کہاکہ حافظ محمد سعید کی نظربندی کے خلاف ملک بھر میں احتجاج ہو رہا ہے۔پاکستان کے علماءکرام اور مشائخ بھی حافظ محمد سعید کے ساتھ ہیں اور انکی رہائی کا مطالبہ کرتے ہیں۔انہوںنے کہاکہ کشمیریوں کی جدوجہد آزادی کی مددوحمایت جاری رکھیں گے۔

About Editor

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*