Breaking News
Home / خبریں / پاکستان / خواجہ آصف کی طرف سے حافظ محمد سعید کیخلاف دیے گئے متنازعہ بیان کیخلاف ملک بھر میں زبردست احتجاجی مظاہرے
خواجہ آصف کی طرف سے حافظ محمد سعید کیخلاف دیے گئے متنازعہ بیان کیخلاف ملک بھر میں زبردست احتجاجی مظاہرے

خواجہ آصف کی طرف سے حافظ محمد سعید کیخلاف دیے گئے متنازعہ بیان کیخلاف ملک بھر میں زبردست احتجاجی مظاہرے

جماعةالدعوة پاکستان کی اپیل پروزیر دفاع خواجہ آصف کی طرف سے حافظ محمد سعید کیخلاف دیے گئے متنازعہ بیان کیخلاف ملک بھر میں زبردست احتجاجی مظاہرے کئے گئے اور ریلیاں نکالی گئیں۔ ملک گیر یوم احتجاج کے دوران لاہور،سیالکوٹ،قصور،گوجرانوالہ، فیصل آباد، اسلام آباد، ملتان، کراچی، حیدر آباد ، کوئٹہ،پشاور، مظفر آباد، کوٹلی اور راولا کوٹ سمیت چاروں صوبوں و آزاد کشمیر میںمظاہروں اور ریلیوںکے دوران لاکھوں افراد نے سڑکوں پر نکل کرخواجہ آصف کی بیان بازی کیخلاف شدید غم و غصہ کا اظہاراور ان سے استعفیٰ لینے کا مطالبہ کیا گیا۔صوبائی دارالحکومت لاہو رمیں سب سے بڑا مظاہرہ چوبرجی چوک میں ہواجس میں طلبائ، وکلاءاور تاجروں سمیت ہزاروں افرادنے شرکت کی۔ احتجاجی مظاہرے کے شرکاءنے بینر ز و پلے کارڈز اٹھا رکھے تھے جن پر ”حافظ محمد سعید محافظ پاکستان ہیں، خواجہ آصف ،شرم کرو ،حیاکرو،میاں مودی دوستی نا منظور نا منظور اور حافظ محمد سعید کیخلاف پروپیگنڈا کشمیری و پاکستانی قوم کے زخموں پر نمک چھڑکنے کے مترادف ہے‘ جیسی تحریریں درج تھیں۔ مظاہرین کی جانب سے حافظ محمد سعید و دیگر رہنماﺅں کی فی الفور رہائی کا بھی مطالبہ کیاگیا۔احتجاجی مظاہرہ سے دفاع پاکستان کونسل اور جماعةالدعوة کے مرکزی رہنما پروفیسر حافظ عبدالرحمن مکی، مولانا امیر حمزہ،حافظ محمد مسعود،حافظ طلحہ سعید، ابوالہاشم ربانی،مولانا احسان الحق شہباز، حافظ خالد ولید،مولانا ادریس فاروقی، عثمان شفیق، حافظ مسعود الرحمن جانباز ودیگر نے خطاب کیا۔دفاع پاکستان کونسل اور جماعةالدعوة کے مرکزی رہنما حافظ عبدالرحمن مکی نے اپنے خطاب میں کہاکہ حافظ محمد سعید و دیگررہنماﺅں کو رہا نہ کیا گیاتو پورے ملک سے لاکھوں افراد کے قافلے اسلام آباد کی جانب مارچ کریں گے اور اتنا بڑا لانگ مارچ کیا جائے گاکہ حکومتی عہدیداران گنتی بھول جائیں گے۔بیرونی قوتیں جماعةالدعوة کے پرامن کارکنان میں اشتعال پھیلانے کی سازشیں کر رہی ہیں۔بعض حکومتی وزراءکی بیان بازی اسی ایجنڈے کا حصہ ہے۔ جماعةالدعوة کے کسی رکن نے ملک میں کبھی ایک پتہ تک نہیں توڑا اور ہمیشہ عدالتوں سے رجوع کیا ہے۔بعض حکومتی وزراءپانامہ سے توجہ ہٹانے کیلئے یہاں انتشار پھیلانا چاہتے ہیں۔ حافظ محمد سعید کیخلاف بیان بازی کر کے آئندہ الیکشن میں کرسی حاصل کرنے کی بھیک مانگی جارہی ہے۔ہم دنیا کے کسی ملک میں کوئی ایجنڈا نہیں رکھتے تاہم کشمیریوں کی مدد پاکستان کی قومی پالیسی ہے۔ ہمارے کشمیر سے متعلق موقف پر اعتراض کرنے والے بتائیں کیا بھارت کو پسندیدہ ترین ملک کا درجہ دینا اور آلو پیاز کی تجارت ریاست کی پالیسی ہے؟ہم ملک میں اشتعال انگیزی نہیں چاہتے ۔ ہم نے ہمیشہ دہشت گردی کی مذمت اور ملک میں اتحادویکجہتی کا ماحول پیدا کرنے کی کوشش کی ہے۔ اس ملک کو خطرہ حافظ محمد سعید سے نہیں کلبھوشن اور ریمنڈ ڈیوس جیسے دہشت گردوں سے ہے جن کے بارے میں حکومتی عہدیداران زبان کھولنے کیلئے تیار نہیں ہیں۔عبدالرحمن مکی نے کہاکہ حکمرانوں نے ہمارے خلاف پیمرا کا لیٹر جاری کر کے اپنے وزراءکو پروپیگنڈا کی کھلی چھوٹ دے رکھی ہے۔ جس دن سے حافظ محمد سعید ودیگر رہنماﺅں کو نظربند کیا گیا ہر روز ایک نیا وزیر کروڑوں پاکستانیوں کو مشتعل کرنے کی کوششیں کر رہا ہے اور کردار کشی مہم چلاتے ہوئے بدزبانی کی جارہی ہے۔کشمیری و پاکستانی قوم کے زخموں پر نمک چھڑکا جارہا اور ملک میں بدامنی پھیلانے کی کوششیں کی جارہی ہیں۔ ہم نے لاہور ہائی کورٹ میں حافظ محمد سعید کی نظربندی کیخلاف رٹ پٹیشن دائر کی ہے خواجہ آصف آئیں عدالت میں آکر بات کریں لیکن ہمیں معلوم ہے اسمبلی میں بیٹھ کر عورتوں کو گالیاں دینے والوں میں اتنی جرا ¿ت نہیں ہے۔ہم اسلام آباد کیلئے نکلے تو پورا پاکستان حافظ محمد سعید کے ساتھ ہو گا۔ تحریک حرمت رسول ﷺ کے کنوینر مولانا امیر حمزہ نے کہاکہ خواجہ آصف دفاع کے وزیر ہیں لیکن ترجمانی بھارت کی کر رہے ہیں۔ پاکستانی معاشرے کو خطرہ حافظ محمد سعید سے نہیں کلبھوشن اور نریندر مودی سے ہے۔ حافظ محمد سعید کیخلاف بیان بازی پر میں وہی بات کہتا ہوں جو آپ نے اسمبلی میں کہی تھی کہ کوئی شرم ہوتی ہے حیا ہوتی ہے۔انہوںنے کہاکہ خواجہ آصف کی بیان بازی سے کشمیری و پاکستانی قوم کے زخموں پر نمک چھڑکا گیا اور پاکستان کی عزت اور وقار کو مجروح کیا گیا ہے۔ جماعةالدعوة کے مرکزی رہنما حافظ محمد مسعود نے کہاکہ خواجہ آصف کا بیان انتہائی مایوس کن ہے ان کے بیان سے لگتا ہے کہ وہ پاکستان میں بھارت کے سہولت کار ہیں۔حساس ادارے سہولت کاروں کو ڈھونڈ رہے ہیں ایک سامنے آ گیا ہے۔صرف استعفیٰ سے بات نہیں بنے گی ۔آنے والا الیکشن ریفرنڈم ہو گا جس میں قوم میاں مودی الائنس کو مسترد کرے گی۔اساتذہ جماعةالدعوة پاکستان کے مسﺅل حافظ طلحہ سعید نے کہاکہ خواجہ آصف نے پاکستان کے دفاع کا حلف اٹھایا لیکن ذمہ داری ادا نہ کر سکے۔پاکستانی وزیر دفاع نے جرمنی میں بھارت کی ترجمانی کی۔حکومتی وزارءکی طرف سے جماعة الدعوة کے رہنماﺅں کی کردار کشی کا سلسلہ بند ہوناچاہئے۔جماعةالدعوة لاہور کے مسﺅل ابوالہاشم ربانی، تحریک آزادی جموں کشمیر کے سیکرٹری جنرل حافظ خالد ولید،مولانا احسان الحق شہباز،مولانا ادریس فاروقی، عثمان شفیق، حافظ مسعود الرحمن جانباز ودیگر نے کہاکہ خواجہ آصف جرمنی میں بیان دینے کی بجائے عدالت آئیں اور بتائیں کہ حافظ محمد سعید کیسے خطرہ ہیں؟۔ حکومتی وزراءپاکستان کی ترقی کا نعرہ لگا کر اسمبلی پہنچے لیکن وہاں جا کر پاکستان اورکشمیر کے دشمن مودی سے دوستی نبھانی شروع کر دی،جب تک کشمیر کی ایک بھی بہن روتی رہے گی ترقی نہیں ہو سکتی،خواجہ آصف حافظ محمد سعید کے بارے میں بیان پر قوم سے معافی مانگیں بصورت دیگر انکی رہائشگاہ کے باہر دھرنا دیا جائے گا۔انہوںنے کہا کہ دفاع کی وزارت سنبھال کر دشمن کی زبان بولنے والوں کو وزارت سے ہٹایا جائے۔ خواجہ آصف کا بیان کشمیری شہداءکے خون سے غداری ہے۔جماعةالدعوة کی طرف سے سیالکوٹ کے علامہ اقبال چوک میں مسلم لیگ ہاﺅس کے سامنے زبردست احتجاجی مظاہرہ کیا گیا ۔ اس دوران طلبائ، وکلاء، تاجروں سمیت شہریوں کی بڑی تعداد نے خواجہ آصف کیخلاف سخت نعرے بازی کی۔ مظاہرین نے کتبے اور بینرز بھی اٹھا رکھے تھے۔ مظاہرہ سے جماعةالدعوة سیالکوٹ کے مسﺅل مولانا رمضان منظور،جماعت اسلامی سیالکوٹ کے امیر ڈاکٹر شکیل اختر، پی ٹی آئی کے رہنما عمر فاروق، پی ایس ایف گوجرانوالہ کے صدر فیصل گجر، سابق ایم پی اے ارشد بھگوو دیگر نے خطاب کیا۔ گوجرانوالہ میں جماعةالدعوة گوجرانوالہ کے مسﺅل احسان اللہ کی قیادت میں مرکز ام القریٰ نگار پھاٹک سے شیرانوالہ باغ تک احتجاجی ریلی نکالی گئی جس میں تمام مکاتب فکر سے تعلق رکھنے والے افراد کی کثیر تعداد نے شرکت کی۔ کراچی میں جماعةالدعوة کی طرف سے پریس کلب کے باہر احتجاجی مظاہرہ سے ڈاکٹر مزمل اقبال ہاشمی و دیگر نے خطاب کیا۔ حیدر آباد میں پریس کلب کے باہر احتجاجی مظاہرہ کیا گیا۔ فیصل آباد میں جماعةالدعوة کے تحت ضلع کونسل چوک میں فیاض احمد ضلعی مسﺅل جماعةالدعوة کی قیادت میں بڑا احتجاجی مظاہرہ کیا گیا۔ اسلام آباد میں نیشنل پریس کلب کے باہر احتجاجی مظاہرہ میں شہریوں کی بڑی تعداد نے شرکت کی۔ ملتان میں چوک نواں شہر میں احتجاجی مظاہرہ سے ضلعی مسﺅل جماعةالدعوة میاں سہیل احمد و دیگر نے خطاب کیا۔ بہاولپور، خانیوال اور دیگر شہروںمیں بھی احتجاجی مظاہرے کئے گئے۔ اسی طرح کوئٹہ، پشاور، مظفر آباد، کوٹلی، راولا کوٹ اور آزاد کشمیر و پاکستان کے دیگر شہروں میں بھی زبردست احتجاجی مظاہرے کئے گئے اور ریلیاں نکالی گئیں۔ مظاہروں میں جماعةالدعوة کے علاوہ دیگر جماعتوں اور تمام مکاتب فکر اور شعبہ ہائے زندگی سے تعلق رکھنے والے افراد نے شرکت کی۔مظاہرین کی جانب سے مودی کا جو یار ہے غدار ہے غدار ہے ، حافظ محمد سعید سے رشتہ کیا لا لہ الا اللہ ، حافظ محمد سعید کی نظر بندی نامنظور نامنظور اور خواجہ آصف بیان واپس لو کے نعرے لگائے جاتے رہے۔

About Editor

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*