Breaking News
Home / خبریں / پاکستان / سید صلاح الدین جیسے لیڈروں کو دہشت گرد قرار دینے سے جدوجہد آزادی کشمیر مزید مضبوط ہو گی۔ ,حافظ عبدالرحمن مکی
سید صلاح الدین جیسے لیڈروں کو دہشت گرد قرار دینے سے جدوجہد آزادی کشمیر مزید مضبوط ہو گی۔ ,حافظ عبدالرحمن مکی

سید صلاح الدین جیسے لیڈروں کو دہشت گرد قرار دینے سے جدوجہد آزادی کشمیر مزید مضبوط ہو گی۔ ,حافظ عبدالرحمن مکی

جماعةالدعوة سیاسی امور کے سربراہ پروفیسر حافظ عبدالرحمن مکی نے کہا ہے کہ بیرونی قوتیں پاکستان میں اپنے مذموم ایجنڈوں کی تکمیل کیلئے دہشت گردی کو پروان چڑھا رہی ہیں۔ حکومت پاکستان بیرونی سازشیں ناکام بنانے کیلئے ملک میں اتحاد و یکجہتی کا ماحول پیدا کرے۔ مذہبی و سیاسی جماعتیں قوم کو متحد و بیدار کرنے کا فریضہ سرانجام دیں۔ سید صلاح الدین جیسے لیڈروں کو دہشت گرد قرار دینے سے جدوجہد آزادی کشمیر مزید مضبوط ہو گی۔ کشمیری قوم دہشت گردی کے جھوٹے اور بے بنیاد پروپیگنڈا سے متاثر ہونے والی نہیں ہے۔جامع مسجد القادسیہ میں خطبہ جمعہ اور بعد ازاں مختلف وفود سے گفتگو کرتے ہوئے انہوںنے کہاکہ وطن عزیز پاکستان میں ہونے والی دہشت گردی کے واقعات میں ملوث عناصر کو فی الفور گرفتار کر کے قرار واقعی سزا دی جائے۔کلمہ طیبہ کے نام پر حاصل کئے گئے ملک میں ایسی دہشت گردانہ سرگرمیوں کی کسی صورت اجازت نہیں دی جاسکتی۔ پارہ چنار اور دیگر شہروں و علاقوں میں ہونیوالی دہشت گردی میں ملوث بیرونی عناصرکو پوری دنیا کے سامنے بے نقاب کرنے کی ضرورت ہے۔ اسلام دشمن قوتیں پاکستان کو بدنام کرنے کیلئے دہشت گردی کی مذموم کارروائیاں کر رہی ہیں۔ دشمنان اسلام کی سازشوں کے مقابلہ کیلئے اندرونی طور پر ملک میں اتحاد ویکجہتی کا ماحول پیدا کرنا انتہائی ضروری ہے۔انہوںنے کہاکہ بھارتی فوج نے کشمیر میں بدترین قتل و غارت گری شروع کر رکھی ہے۔ روزانہ بے گناہ کشمیریوں کو شہید، ان کی املاک تباہ اور انسانی حقوق کی خلاف ورزیاں کی جارہی ہیں لیکن امریکہ کو نہتے کشمیریوں پر ڈھائے جانے والے ظلم و بربریت اور کشمیریوں کے بہتے خون کی کوئی پرواہ نہیں ہے اور محض اسلام و مسلمان دشمنی کی بنیاد پر کشمیر ی لیڈروں کو دہشت گرد قرار دیکر بھارتی زبان بولی جارہی ہے۔حالیہ اعلان سے مودی سرکار کی طرح امریکہ کا دوہرا کردار بھی بے نقاب ہو گیا ہے۔انہوں نے کہا کہ بھارتی فوج نہتے کشمیریوں کی نسل کشی کررہی ہے۔ خواتین کی عزتیں تار تار کی جارہی ہیں اور کشمیریوںکی املاک کو تباہ و برباد کیا جا رہا ہے۔ افسوسناک امر یہ ہے کہ حکومت کی جانب سے بھارتی جارحیت اور مظالم کے خلاف کوئی آواز بلند نہیں کی جا رہی۔ کشمیر کی آزادی میں ہی پاکستان کی سلامتی کا راز مضمر ہے۔ بھارت ریاستی دہشت گردی کے ذریعہ مقبوضہ کشمیر پر زیادہ دیر تک اپنا غاصبانہ تسلط برقرار نہیں رکھ سکتا۔عبدالرحمن مکی نے کہاکہ امریکہ بھارتی خوشنودی کیلئے کشمیری لیڈروں کیخلاف دہشت گردی کا پروپیگنڈا کر رہا ہے۔ حالیہ اعلان سے بھارت ، امریکہ گٹھ جوڑ صاف واضح ہو گیا اور یہ بات ثابت ہو گئی ہے کہ نہتے کشمیر یوں کی قتل و غارت گری کیلئے مودی سرکار کو ٹرمپ انتظامیہ کی مکمل سرپرستی حاصل ہے۔ نریندر مودی کی منت سماجت پر امریکہ کی جانب سے انہیں دہشت گرد قرار دینے سے تحریک آزادی کمزور نہیں بلکہ اور زیادہ مضبوط ہو گی۔ انہوںنے کہاکہ دشمنان اسلام کے تسلط سے نجات کیلئے مسلمانوں کو واپس اپنے اصل دین کی طرف پلٹنا ہو گا۔ ضرورت اس امر کی ہے کہ مسلمان اپنے عقائد واعمال کی اصلاح کریں، مغربی کلچر و ثقافت چھوڑ کر محمدی کلچر پر عمل پیرا ہوں۔ ساٹھ سے زائد ملکوں کو اللہ نے ہر قسم کے وسائل کی دولت سے نواز رکھا ہے اگر یہ اتحادویکجہتی کا مظاہرہ کریں تو مسلمانوں کے تمام مسائل حل ہو سکتے ہیں۔ حکمرانوں کو چاہیے کہ وہ کشمیری مسلمانوں کی جدوجہد آزادی کا کھل کر ساتھ دیں اور انہیں آٹھ لاکھ بھارتی فوج کے تسلط سے نجات دلانے کی کوششیں کریں وہ وقت دور نہیں جب کشمیری مسلمان ان شا ءاللہ آزاد فضا میں سانس لیں گے۔انہوںنے کہاکہ مظلوم کشمیریوں کی ہر ممکن مددوحمایت کا سلسلہ جاری رکھیں گے۔ 

About Editor

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*